جموں و کشمیر میں ڈسٹرکٹ ڈیولپمنٹ کونسل (ڈی ڈی سی) اور پنچایتی و بلدیاتی ضمنی انتخابات کے پانچویں مرحلے کی پولنگ کا عمل صبح سات بجے شروع ہوا اور دو بجے اختتام پذیر ہوگا۔

جموں و کشمیر میں آج سخت سکیورٹی انتظامات کے درمیان ضلعی ترقیاتی کونسل کے انتخابات اور پنچایت ضمنی انتخابات کے پانچویں مرحلے کے لیے ووٹنگ جاری ہے۔

تفصیلات کے مطابق آج پانچویں مرحلے کے تحت ڈی ڈی سی کے 37 حلقوں میں ووٹنگ ہوگی جن میں وادیٔ کشمیر کے 17 حلقے اور جموں خطے کے 20 حلقے شامل ہیں۔

کشمیر خطے کے 17 ڈی ڈی سی حلقوں میں 155 امیدوار قسمت آزما رہے ہیں جن میں 30 خواتین بھی شامل ہیں۔ وہیں جموں میں 20 حلقوں کے لیے 144 امیدوار میدان میں ہیں جن میں 40 خواتین بھی شامل ہیں۔

پانچویں مرحلے میں 125 سرپنچ خالی نشستیں ہیں جن میں 30 سرپنچ بلامقابلہ منتخب ہوئے ہیں۔ 58 حلقوں میں مقابلہ ہوگا جن کے لیے 51 خواتین سمیت 175 امیدوار میدان میں ہیں۔

اس مرحلے کے لیے 2104 پولنگ اسٹیشن قائم کیے گئے ہیں جن میں سے 914 جموں ڈویژن میں اور 1190 کشمیر ڈویژن میں ہیں۔ 2104 پولنگ اسٹیشنوں میں سے 1193 انتہائی حساس جبکہ 472 پولنگ مراکز حساس ہیں۔ اس کے علاوہ 58 خالی سرپنچ اور 218 خالی پنچ نشستوں پر ووٹنگ جاری ہے۔

آٹھ مرحلوں پر محیط اس پولنگ کا سلسلہ 19 دسمبر کو اختتام پذیر ہوگا جبکہ 22 دسمبر کو نتائج کا اعلان کیا جائے گا۔ جموں و کشمیر میں پہلی مرتبہ ڈی ڈی سی کے انتخابات منعقد کئے جانے سے جموں و کشمیر میں تھری ٹائر پنچایتی راج سسٹم رائج ہوگا۔ وہیں یوٹی میں ڈی ڈی سی کونسلوں کو پانچ برس کی مدت کے لئے منتخب کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات پارٹی بنیادوں پر ہورہے ہیں۔ اس میں 6 سیاسی جماعتوں بشمول نیشنل کانفرنس، پی ڈی پی، عوامی نیشنل کانفرنس، پیپلز مومنٹ، پیلز کانفرس اور سی پی آئی ایم کا مشترکہ فورم عوامی اتحاد برائے گپکار اعلامیہ، بھارتیہ جنتا پارٹی اور کانگریس سمیت اپنی پارٹی حصہ لے رہی ہیں۔

قابل ذکر ہے کہ جموں و کشمیر میں ضلع ترقیاتی کونسل کے پہلے مرحلے کی ووٹنگ میں 51.7 فیصد، دوسرے مرحلے میں 48.62 اور تیسرے مرحلے میں 50.53 فیصد پولنگ ریکارڈ کی گئی۔

The submit ڈی ڈی سی انتخابات: پانچویں مرحلے کی ووٹنگ جاری appeared first on Kupwara Times.

Source by [author_name]